چیف جسٹس نے کہا کہ وہ اعلیٰ حکام کوعدالت میں بلانے کے حق میں نہیں اور آج انہوں سب کوبلا لیا۔

سینئیر صحافی ارشاد بھٹی نے چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ کی جانب سے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کی مدتِ ملازمت میں توسیع سے متعلق درخواست پر ازخود نوٹس لے کر فیصلے کو معطل کرنے کے بعد کہا ہے کہ

کل چیف جسٹس نے کہا کہ وہ اعلیٰ حکام کوعدالت میں بلانے کے حق میں نہیں اور آج انہوں سب کوبلا لیا۔ سینئیر صحافی نے اپنے ٹویٹر پیغام میں کہا ہے کہ چیف جسٹس ازخودنوٹس کے خلاف ہیں لیکن آرمی چیف سے متعلق درخواست گذار کی جانب سے درخواست واپس لینے کے باوجود انہوں نے ازخودنوٹس لے لیا۔


انہوں نے کہا ہے کہ مجھےاپنی عدالتوں پر اعتبار ہے اور مجھے میری عدالتوں پر یقین ہے کہ وہ آزاد ہیں آج کے فیصلے کے بعد ایسے کئی سوالات جنم لے رہے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں